Pakistan

سوال # 176010

سوال یہ ہے کہ ہمارے علاقے میں قبیلہ کی ایک مشترکہ زمین کو قبرستان کے لئے وقف کیا گیا تھا جس کہ ایک حصے میں بعد میں مسجد تعمیر کی گئی۔ مسجد تقریبا پچھلے 20 سال سے آباد ہے لیکن اب کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ یہ زمین قبرستان کے لئے وقف تھی لہذا یہاں نماز پڑھنا جائز نہیں۔ براہ کرم شریعت کی روشنی میں رہنمائی فرمائیں۔

Published on: Jan 21, 2020

جواب # 176010

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 425-345/D=05/1441



جو زمین جس مقصد کے لئے وقف کی گئی ہو اسی میں استعمال کیا جانا ضروری ہے لیکن اگر کسی جگہ قبرستان کی زمین تدفین موتی کی ضروریات سے زاید ہو اور وہاں مسجد کی سخت ضرورت ہو تو ایسے وقت میں مسجدکے تعمیر کی اجازت ہو جاتی ہے جب مسجد تعمیر ہوگئی تو اس میں نماز ادا کرنا بلاکراہت درست ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات