India

سوال # 176129

مسئلہ دریافت طلب یہ ہے کہ میں نے قربانی کی نیت سے ایک سال پہلے قربانی کا جانور پال رکھا ہے ،تو کیا قربانی کی نیت سے ایک سال پہلے ہی اس جانور کو پالنا جائز ہے ؟ کیا میرا عمل درست ہے ؟

Published on: Feb 6, 2020

جواب # 176129

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:491-409/L=6/1441



قربانی کے جانور کو پالنا اور اس سے مانوس ہونا اس کو کھلاکر فربہ بنانا نہ صرف جائز؛ بلکہ مستحسن اور ثواب کی زیادتی کا باعث ہے۔ والمستحب أن تکون الأضحیة أسمنہا وأحسنہا وأعظمہا.(الفتاویٰ الہندیة، کتاب الأضحیة / قبیل الباب السادس ۳۰۰/۵)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات