عقائد و ایمانیات - حدیث و سنت

India

سوال # 175558

کیا بات سچ ہے کہ حضرت آدم علیہ السلام نے ہمارے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کا وسیلہ مانگا تھا؟

Published on: Jan 2, 2020

جواب # 175558

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 359-314/D=05/1441



اس سلسلے میں مستدرک حاکم میں حضرت عمر رضی اللہ عنہ سے یہ روایت منقول ہے: عن عمر بن الخطاب قال: قال رسول اللہ - صلی اللہ علیہ وسلم - ”لمّا اقترف آدم الخطیئة قال: یاربّ! أسألک بحقّ محمّد أن غفرت لي، فقال اللہ: فکیف عرفت محمّدا ولم أخلقہ بعد فقال: یاربّ! لأنّک لمّا خلقتنی بیدک ونفخت فيّ من روحک ورفعت رأسي فرأیت علی قوائم العرش مکتوبا لاإلہ إلاّ اللہ محمّد رسول اللہ فعلمت أنّک لم تضف إلی اسمک إلاّ أحبّ الخلق إلیک فقال اللہ: صدقت یا آدم إنّہ لأحبّ الخلق إليّ ، وإذ سألتني بحقّہ فقد غفرت لک ولولا محمّد ما خلقتک ۔ (المستدرک علی الصحیحین للحاکم : ۲/۶۷۲، بیروت)



مگر محدثین کے نزدیک یہ روایت حد درجہ ضعیف ہے؛ بلکہ علامہ ذہبی نے اسے موضوع قرار دیا ہے۔ (البواقیت العالیہ: ۱/۲۷۱)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات