معاشرت - طلاق و خلع

Pakistan

سوال # 175897

ایک دن میری بیوی نے میرے بچے کا خیال نہ رکھا اور اس کو چوٹ لگی میں نے غصے سے بیوی کو کہا نہ تم میں بیوی کی کچھ صفات ہیں اور نہ تم عورت نہ بیوی ہو اور پھر کہا نہ کرو بیوی پن ٹھیک ہے ۔ ان سب میں میرا خیال یہ تھا کہ تم اپنی ذمہ داری نہیں نبھا سکتی ،طلاق کا تو میرے وہم و گمان میں بھی نہیں تھا۔۔ اب اپ مفتی صاحبان بتائیں کہ بغیر نیت کے کہی طلاق تو نہیں ہوئی اس جملوں سے ۔

Published on: Jan 12, 2020

جواب # 175897

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 455-415/M=05/1441



صورت مسئولہ میں جب کہ مذکورہ جملے سے آپ کی نیت طلاق دینے کی بالکل نہیں تھی تو آپ کی بیوی پر کسی قسم کی کوئی طلاق واقع نہیں ہوئی۔ ولو قال: ما أنتِ لي بامرأة أو لستُ لکِ بزوج ، ونوی الطلاق یقع أبي حنیفة رحمہ اللہ (ہندیة: ۱/۴۴۳، ط: اتحاد دیوبند)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات