عبادات - صلاة (نماز)

India

سوال # 175867

نماز میں آواز سے آمین کہنا کیا سنت ہے ؟

Published on: Jan 12, 2020

جواب # 175867

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 452-413/M=05/1441



حنفیہ کے نزدیک آمین سرًّا (آہستہ آواز سے) کہنا اولیٰ ہے۔ عن أبي ہریرة رضی اللہ عنہ أن رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم قال: إذا قال الإمام: ”غیر المغضوب علیہم ولا الضآلین“ فقولوا: آمین، فإنہ من وافق قولہ قول الملائکة غفر لہ ما تقدم من ذنبہ ۔ (صحیح بخاری: ۱/۱۰۸) ۔



قال العلامة ظفر أحمد العثماني: ویُستفاد منہ أن الإمام یخفی بہا لأن تأمین الإمام لو کان مشروعاً بالجہر لما علّق النبي صلی اللہ علیہ وسلم تأمینہم بقولہ: ولا الضآلین بل علّق بقولہ ”آمین“ (إعلاء السنن: ۲/۲۴۶، دارالکتب العلمیہ بیروت) ۔ أخرج الترمذي بسندہ عن علقمہ بن وائل عن أبیہ أنّ النبي صلی اللہ علیہ وسلم قرأ ”غیر المغضوب علیہم ولا الضالین“ فقال آمین وخفض بہا صوتہ ۔ (سنن الترمذي: ۱/۵۸، رقم: ۲۴۸)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات