عبادات - صلاة (نماز)

India

سوال # 165366

فحش تصویر دیکھنے سے یا سوچنے سے کچھ قطرہ آجاتا ہے۔ کیا میں اسی حالت میں نماز پڑھ سکتا ہوں یا غسل کرنا ضروری ہے؟ براہ کرم وضاحت فرماویں۔

Published on: Sep 6, 2018

جواب # 165366

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:1423-1172/sd=12/1439



 اگریہ قطرہ مذی کا ہوتا ہے ، یعنی اس کے نکلنے پر شہوت قائم رہتی ہے ، تو اس سے صرف وضوء ٹوٹتا ہے ، غسل کرنا ضروری نہیں ہے ، وضوء کرکے نماز پڑھی جاسکتی ہے ؛ البتہ یہ قطرہ بھی ناپاک ہوتا ہے ، اس لیے اگر بدن یا کپڑے پر لگ جائے ، تو دھولینا چاہیے اور اگر ایک درہم کے پھیلاوٴ سے زیادہ پھیل جائے ، تو دھونا ضروری ہوگا، واضح رہے کہ فحش تصویر دیکھنا یا قصدا سوچنا جائز نہیں ہے ، اس میں دینی نقصان کے علاوہ صحت کا بھی نقصان ہے ۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات