عبادات - قسم و نذر

India

سوال # 8822

میرا سوال یہ ہے کہ ایک لڑکے نے ایک لڑکی سے وعدہ کیا تھا کہ وہ اس لڑکی سے ضرور نکاح کرے گا یہاں تک کہ دم نکل رہا ہو۔بعد میں دونوں کی الگ الگ جگہوں پر شادی ہوگئی۔ اب اس لڑکے کے وعدے کا کیا ہوگا؟ کیا اسے کچھ کفارہ دینا پڑے گا؟

Published on: Nov 17, 2008

جواب # 8822

بسم الله الرحمن الرحيم

فتوی: 1427=1191/ل


 


اگر کسی مجبوری کی وجہ سے وہ لڑکا اپنا وعدہ پورا نہ کرسکا تو اس پر کوئی گناہ نہیں۔

نوٹ: اگر اس لڑکے نے قسم کھائی ہو تو اس کو لکھ کر دوبارہ معلوم کریں۔

واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات