معاشرت - نکاح

Pakistan

سوال # 164897

کیا فرماتے ہیں اس کے بارے میں میرے نکاح کو پانچ سال گزرے ، ایک بچہ بھی ہے ، اب میری زوجہ سات ماہ کی امید سے ہے ، میں نے بیوی سے ہمبستری کے دوران پستان چوسے اور اس کی وجہ سے دودھ کا ذائقہ منہ میں محسوس ہوا، اور نگلنے کا بھی شک ہے ، اس مسئلے کے پوچھنے کا مقصد نکاح کی صحت پر اثر پڑتا ہے یا نہیں۔ البتہ شوہر کو بالکل پتہ نہیں تھا کہ پستانوں میں دودھ آ گیا ہے ۔ اس معاملے میں رہنمائی فرمائیں۔ مہربانی فرماکر جلد جواب عنایت فرمائیں۔

Published on: Sep 20, 2018

جواب # 164897

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:1537-1295/D=1/1440



بیوی کا پستان چوسنے سے اگر دودھ کا کچھ مزا بھی منھ میں محسوس ہوا ہو اس سے نکاح پر کوئی اثر نہیں پڑا، نکاح بدستور برقرار ہے، البتہ پستان میں دودھ ہونے کا گمان ہونے کی صورت میں چوسنے سے احتراز کرنا چاہیے کیونکہ دودھ کا ایک قطرہ بھی شوہر کے لیے حرام ہے، اگر منہ میں چلا جائے تو فوراً تھوک دے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات