معاملات - سود و انشورنس

India

سوال # 154989

کیا سود کا پیسہ مسلمانوں کے قبرستان میں باوٴنڈری یا صفائی یا دروزہ کے لیے دیا جاسکتا ہے؟

Published on: Oct 10, 2017

جواب # 154989

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 17-15/D=1/1439



بینک سے ملنے والی سودی رقم کو بلانیت ثواب، اپنے اوپر وبال کو ختم کرنے کے لیے فقراء میں تقسیم کرنا ضروری ہے، لہٰذا اسے قبرستان کی باوٴنڈری، صفائی یا دروازہ وغیرہ میں خرچ نہیں کیا جاسکتا ہے۔ قال شیخنا: ویستفاد من کتب فقہائنا کالبدایة وغیرہا أن من ملک بملک خبیث ولم یمکنہ الرد إلی المالک، فسبیلہ التصدق علی الفقراء، قال إن المتصدق بمثلہ ینبغی أن ینوي بہ فراغ ذمة ولایرجو بہ المثوبة ۔ معارف السنن: ۱/۳۴، سعید (چند اہم عصری مسائل: ۱/۳۲۶، ط: دارالعلوم دیوبند)۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات