عقائد و ایمانیات - بدعات و رسوم

India

سوال # 164196

بارات کتنے آدمیوں کی کہلائے گی اگر سو آدمی گھر کے ہوجائے اور وہ شرعی نکاح میں جائیں تو کیا یہ بارات کہلائے گی؟

Published on: Sep 19, 2018

جواب # 164196

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 1250-969/SN=1/1440



جب دولہن کو رخصت کراکر لانے کا ارادہ ہو تو لڑکا اپنے والد ، بھائی یا خاندان کے دو چار موٴقر لوگوں کے ساتھ چلا جائے اور دولہن کو بعد نکاح رخصت کراکر لے آئے، یہی شرعی طریقہ ہے، رسم کے طور پر بڑی تعداد میں لوگوں (خواہ وہ گھر کے افراد ہی کیوں نہ ہوں) کو لے جانا قابل ترک ہے، رسم کی پابندی کے طور پر لوگوں کو لے جانا ہی درحقیقت ”بارات“ ہے خواہ لوگ کم (۱۰-۲۰) ہوں یا زیادہ؛ باقی ضرورت (مثلاً دولہن کے گھر والوں سے بات چیت کرنے یا راستہ کے خطرہ کے پیش نظر) کے تحت دو چار افراد کو لے جانا یہ ”بارات ممنوعہ“ نہیں ہے، ایسا کرنا شرعاً جائز ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات