معاملات - وراثت ووصیت

India

سوال # 167751

اگر کسی شخص کے کئی بیٹے ہوں جس میں سے ایک اپنے ماں باپ کی زندگی میں فوت ہو جائے اور اپنے پیچھے نابالغ اولاد چھوڑ جائے تو اس کی اولاد کو میراث میں حصہ ملے گایا نہیں؟یا میراث صرف اس کے بچے ہوئے بیٹوں کے درمیان ہی تقسیم ہوگی؟

Published on: Jan 10, 2019

جواب # 167751

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 460-411/M=05/1440



اگر دادا ، دادی کے انتقال کے وقت اُن کے اپنے بیٹے موجود ہوں تو پوتے، پوتیوں کو دادا، دادی کی میراث سے کوئی حصہ نہیں ملے گا، ہاں اگر دادا، دادی اپنی حیات میں پوتے، پوتیوں کو حصہ دینا چاہیں تو دے سکتے ہیں یا انتقال کے وقت وصیت کرنا چاہیں تو ایک تہائی مال میں وصیت جاری ہو سکتی ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات