عقائد و ایمانیات - حدیث و سنت

india

سوال # 160752

ہم ایک حدیث کی تحقیق چاہتے ہیں، وہ یہ ہے کہ
(اگر آپ صلی اللہ علیہ وسلم اس دنیا میں تشریف نہ لاتے ، تو دنیا کا وجود نہ ہوتا) کیا یہ حدیث درست ہے ؟ تحقیق پیش کرکے شکریہ کا موقع دیں۔

Published on: Apr 15, 2018

جواب # 160752

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:988-836/L=7/1439



حدیث ”لولاک لما خلقت الأفلاک“ (آپ نہ ہوتے تو جہاں کو میں پیدا نہ کرتا)ان الفاظ سے ثابت نہیں ؛بلکہ محدثین نے ان الفاظ سے حدیث کو موضوع لکھا ہے؛البتہ مضمون صحیح اور ثابت ہے،ملا علی قاری رحمہ اللہ تعالیٰ نے تحریر فرمایا ہے: ”لولاک لما خلقت الأفلاک قال الصنعاني: موضوع، کذا في الخلاصة، لکن معناہ صحیح، قد روی الدیلمي ن ابن عباس رضي اللہ تعالیٰ عنہما مرفوعًا: ”أتاني جبرئیل فقال: یا محمد صلی اللہ علیہ وسلم! لولاک لما خلقت الجنة، لو لاک لما خلقت النار“ وفي روایة ابن عساکر: ”لولاک لما خلقت الدنیا“( موضوعات کبیر :۷۰)۔ (فتاویٰ محمودیہ: ۴/۸۴، امداد الفتاویٰ: ۵/۷۹، خیر الفتاویٰ: ۱/۲۶۷)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات