عقائد و ایمانیات - حدیث و سنت

india

سوال # 160406

جیسا کہ ہم جانتے ہیں کہ ہم جس جدید دور میں جی رہے ہیں اس میں سوشل میڈیا کی بہت اہمیت ہے اور یے ہماری روز مرہ زندگی کا ایک اہم حصہ ہے اس کے جانب سے ہمیں کافی علم حاصل ہوتا ہے ، کافی عرصہ سے میرے پاس ایک میسج آتا ہے جس میں حدیث کے مطالق ذکر کیا گیا ہے جس کا تذکرہ مندرجہ زیل ہے "فلا تاریخ سے رمضان المبارک شروع ہو نے والے ہیں اور نبی کریم نے فرمایا ہے کہ جو سب سے پہلے رمضان کی جانکاری دے اس پر دوذخ کی آگ حرام ہے ، کیا یہ حدیث صحیح ہے یا نہیں؟ مجھے مظبوط حوالے سے اس کی صحیح جانکاری دیں میں آپ کے جواب کا منتظر رہوں گا۔

Published on: Apr 18, 2018

جواب # 160406

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:807-744/M=7/1439



ہمارے علم میں ایسی کوئی حدیث نہیں، جو لوگ سوشل میڈیا پر اس کو حدیث کے نام سے پھیلارہے ہیں ان سے اس کا حوالہ دریافت کریں، اور جب تک تحقیق سے حدیث ہونا معلوم نہ ہوجائے اسے ہرگز شیئر نہ کریں، جو بات حدیث نہیں ہے اس کو حدیث کہنا اور رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی جانب منسوب کرکے بیان کرنا جھوٹ، بہتان اور سخت گناہ ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات