Pakistan

سوال # 2427

رزق کی تنگی دور کرنے کے لیے کوئی طریقہ بتائیں، اللہ سے دعا کرتاہوں کہ رزق میں اضافہ ہومگر کوئی ذریعہ نہیں بن پارہاہے، ہنر ہاتھ میں ہے مگر پیسے نہیں ہیں، نوکری سے گزارا نہیں ہوتاہے، ٹینش زیادہ ہے۔ دعاکریں، کوئی راستہ بتادیں۔

Published on: Jan 10, 2008

جواب # 2427

بسم الله الرحمن الرحيم

فتوی: 630/ ل= 631/ ل


 


فضائل اعمال کے فضائل نماز صفحہ ۱۹۳ پر مذکور ہے کہ عبد اللہ بن سلام رضی اللہ عنہ کہتے ہیں کہ جب نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے گھر والوں پر کسی قسم کی تنگی پیش آتی تو ان کو نماز پڑھنے کا حکم فرمایا کرتے تھے اور یہ آیت تلاوت فرماتے: وَاْمُرْ اَھْلَکَ بِالصَّلاَةِ وَاصْطَبِرْ عَلَیْھَا لاَ نَسْاَلُکَ رِزْقًا الآیة۔ ترجمہ: اپنے گھروالوں کو نماز کا حکم کرتے رہیے اور خود بھی اس کا اہتمام کیجیے ہم آپ سے روزی کموانانہیں چاہتے، روزی تو آپ کو ہم دیں گے۔ اس لیے آپ خود بھی اور تمام گھروالے نماز کا اہتمام کریں اور کسی بھی نماز کے بعد اول و آخر گیارہ گیارہ بار درود شریف پڑھ کر ۷۰/ مرتبہ اس دعا کو پڑھ لیا کریں ان شاء اللہ رزق کی تنگی دور ہوجائے گی۔ دعا یہ ہے: اللّٰھُمَّ أَکْفِنِيْ بِحَلاَلِکَ عَنْ حَرَامِکَ وَأَغْنِنِيْ بِفَضْلِکَ عَمَّنْ سِوَاکَ


واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات