Pakistan

سوال # 168038

اگر کوئی شخص لواطت کی بیماری میں مبتلاء ہو وہ فاعل یا مفعول ، اگر وہ صدق دل سے اللہ کے حضور توبہ کرے تو کیا اللہ پاک اس کا یہ گناہ معاف فرما دیں گےَ؟ اور کیا اس گناہ کے بارے میں اس سے کوئی حساب لیا جائے گا ؟جب کہ وہ توبہ کرچکاہے۔

Published on: Jan 24, 2019

جواب # 168038

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:416-351/sd=5/1440



سچی توبہ کرنے سے ان شاء اللہ گناہ معاف ہوجائے گا ، شرط یہ ہے کہ سچی پکی توبہ کی جائے ، گناہ پر شرمندگی اور ندامت ہو اورآیندہ اس گناہ سے بچنے کا پختہ عزم ہو ۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات