india

سوال # 166221

مردوں کو رخسار پر جو بال آتے ہیں اس کا خط بنانا یہ اپنے حال پر چھوڈ دینا دونوں میں سے مسنون طریقہ کیا ہے ؟ خط بنانا یا اپنے حال پر چھوڈ دینا ہے ؟ مونچھوں کو کاٹنے کا مسنون طریقہ کیا ہے ؟ اور کتنے دنوں کے بعد کاٹ سکتے ہیں؟

Published on: Dec 6, 2018

جواب # 166221

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:175-223/sd=3/1440



 (۱) رخسار کے بال مونڈھنے کی گنجائش ہے ؛ لیکن اتنے زیادہ نہیں کاٹنے چاہییں کہ چہرہ بدشکل ہوکر مخنث کے مشابہ ہوجائے اور بہتر یہ ہے رخسار کے بال نہ مونڈھے جائیں۔



(۲) بہتر یہ ہے کہ مونچھیں قینچی وغیرہ سے نکالی جائیں اور اتنی چھوٹی کردی جائیں کہ مونڈنے کے قریب محسوس ہوں، احادیث میں مونچھیں نکالنے کے بارے میں جو الفاظ استعمال ہوئے ہیں، ان سے قینچی وغیرہ سے کاٹنا ہی مفہوم ہوتا ہے ؛ باقی استرہ اور بلیڈ سے صاف کرنا بھی جائز ہے ؛ لیکن خلافِ اولیٰ ہے ؛ اس لیے کہ استرہ وغیرہ سے صاف کرنے سے متعلق بدعة اور سنت دونوں طرح کے اقوال ہیں اورجو فعل سنت وبدعت کے درمیان دائر ہو اس کا ترک ہی اولیٰ ہوتا ہے ۔



وفیہ (مجتبی) حلق الشارب بدعة وقیل سنّة (درمختار: ۵۸۳/۹، ط: زکریا) إذا تردد الحکم بین سنّة وبدعة کان ترک السنة راجحا علی فعل البدعة (شامی ۴۰۹/۱زکریا) وہکذا فی الفتاوی المحمودیہ (/۱۹ ۴۱۲، ڈابھیل)



(۳) مونچھ وغیرہ کے بال ہر ہفتے کاٹ لینا مستحب ہے اور چالیس دن سے زیادہ تاخیر کرنا مکروہ تحریمی ہے ۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات